حافظ حمد اللہ کی شہریت منسوخی کا حکم معطل

0 241

اسلام آباد : اسلام آباد ہائی کورٹ نے سنیٹر حافظ حمد اللہ کی شہریت منسوخی کا حکم معطل کردیا اور نادرا سے 14 روز جواب طلب کرلیا ، نادرا نے حافظ حمد اللہ کا شناختی کارڈ منسوخ کردیا تھا، ریکارڈ کے مطابق وہ غیر ملکی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ میں چیف جسٹس اطہر من اللہ نے حافظ حمد اللہ کی شہریت منسوخی سے متعلق کیس کی سماعت کی، وکیل حافظ حمد اللہ نے عدالت کو بتایا کہ حافظ حمد اللہ سنیٹر ہیں، چھ بار الیکشن لڑا ہے اور ممبر صوبائی اسمبلی بھہ رہ چکے ہیں۔ پورا خاندان پاکستانی پاسپورٹ رکھتا ہے۔

چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ کس نے شناختی کارڈ بند کردیا ہے؟ جس پر وکیل نے عدالت کو بتایا کہ شہریت نادرا نے ختم کی، حافظ حمد اللہ کا ایک بیٹا آرمی میں بھی ہے۔

چیف جسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ اگر کوئی اپنا خون اس ملک کے لئے قربان کرسکتا ہے تو وہ کیسے محب وطن شہری نہیں۔

نادرا حکام نے عدالت کو بتایا کہ دسمبر 2018 میں پہلی بار حافظ حمد اللہ کو خط لکھ کر بلاک کیا تھا اور ڈسٹرکٹ لیول کمیٹی کو آگاہ کیا گیا تھا جبکہ حافظ حمد اللہ اس کمیٹی میں پیش بھی ہوئے تھے اور حافظ حمد اللہ سے اس کمیٹی نے دستاویزات طلب کیں۔ جو دستاویزات حافظ حمد اللہ نے پیش کیں وہ بوگس نکلیں۔

تبصرے
Loading...